حسنین شاہ کے قاتل گرفتار نہ ہوئے تو پارلیمنٹ کے سامنے دھرنا دیں گے، پی ایف یو جے، کے یو جے

0
867

حسنین شاہ کے قاتل گرفتار نہ ہوئے تو پارلیمنٹ کے سامنے دھرنا دیں گے، پی ایف یو جے، کے یو جے
کراچی:(اسٹاف رپورٹر) پاکستان فیڈرل یونین آف جرنلسٹس (پی ایف یو جے) کے صدر جی ایم جمالی نے کہا ہے کہ ہم پنجاب اور وفاقی حکومت کو مہلت دیتے ہیں کہ حسنین شاہ کے قاتلوں کو فوری طور پر گرفتار کیا جائے ورنہ ہم پارلیمنٹ ہائوس کے باہر دھرنا دینے پر مجبور ہوں گے۔کراچی یونین آ ف جرنلسٹس (کے یو جے) کے صدر اعجاز احمد نے استفسار کیا کہ آ خر لاہور کے ریڈ زون میں حسنین شاہ کے قاتل فائرنگ کرکے کس طرح با آ سانی فرار ہوگئے؟ وہ منگل کو یہاں پی ایف یو جے کی ملک گیر احتجاج کی اپیل پر کراچی یونین آ ف جرنلسٹس (کے یو جے) کے تحت کراچی پریس کلب کے سامنے ہوئے ایک بڑے احتجاجی مظاہرے سے خطاب کررہے تھے، جس سے کے یو جے کے جنرل سیکریٹری عاجز جمالی، سابق صدر حسن عباس، پارلیمانی رپورٹرز ایسوسی ایشن کے اکرم بلوچ، پاکستان ایسو سی ایشن آف پریس فوٹوگرافرز (پیپ) کے صدر جمیل احمد، سندھ اسپورٹس جرنلسٹس ایسو سی ایشن (سجاس) کے جنرل سیکریٹری اصغر عظیم، جوائنٹ ایکشن کمیٹی کی رہنما مہناز رحمان اور دیگر نے خطاب کیا۔ جی ایم جمالی نے کہا کہ ملک بھر میں اب صحافی محفوظ نہیں رہے۔ انہوں نے اعلان کیا کہ آ ج صرف مظاہرے کئے جارہے ہیں مگر آ ئند ہ دھرنے بھی دیے جائیں گے۔ مظاہرین نے پنجاب حکومت سے مطالبہ کیا کہ حسنین شاہ کے قاتلوں کو بلا تاخیر گرفتار کیا جائے۔ مظاہرین نے صحافیوں خصوصاً حسنین شاہ کی ٹارگٹ کلنگ کے خلاف اور قاتلوں کی گرفتاری کے لیے زوردار نعرے لگائے۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here